site
stats
انٹرٹینمںٹ

شامی بچوں سے ملاقات، پریانکا کا ناقد کو کرارا جواب

ممبئی: بھارتی اداکارہ پریانکا چوپڑا نے شامی بچوں کے کیمپ کے دورے پر تنقید کرنے والے بھارتیوں کو کرارا جواب دیتے ہوئے کہا ہے کہ میں نے 12 سال تک بھارت میں فلاحی کام کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پریانکا چوپڑا جو یونیسیف کی خیرسگالی سفیر بھی ہیں انہوں نے دو روز قبل شامی جنگ سے متاثر ہوکر اردن پہنچنے والے مہاجرین بچوں سے ملاقات کی اور اُن کے ساتھ کافی وقت گزارا۔

پریانکا کے دورے کا مقصد مہاجر کیمپ میں مقیم شامی بچوں کی تعلیم اور دیگر مسائل تھا، بالی ووڈ اداکارہ نے اپنے انسٹا گرام پر تصاویر بھی شیئر کیں جس میں انہوں نے کہا کہ ہمیں جنگ سے متاثرہ بچوں کے لیے اپنے دلوں کو کھولنا ہوگا۔

شامی بچوں سے اظہار یکجہتی بھارتی فلم ڈائریکٹر رویندرا گوتم سے بالکل برداشت نہ ہوئی اور انہوں نے پریانکا کو کہا کہ ’بھارت کے دیہی علاقوں کا بھی دورہ کریں جہاں بچے غذا کی کمی کا شکار ہیں اور اچھی خوراک کے منتظر ہیں‘۔

پڑھیں: پریانکا چوپڑا شامی جنگ سے متاثرہ بچوں کی مدد کے لیے سرگرم

پریانکا نے رویندرا کوکرارا جواب دیتے ہوئے کہا کہ ’میں بھارت میں یونیسیف کے ساتھ 12 سال تک کام کرتی رہی ہوں اور دیہی علاقوں کے دورے کیے، مگر آپ یہ بتائیں کہ مسٹر رویندا آپ نے  آج تک کون سا فلاحی کام کیا؟‘۔ پریانکا نے شامی بچوں سے موازنہ کرنے پر کہا کہ ’آخر کیوں ایک بچے کا مسئلہ دوسرے سے علیحدہ ہوتا ہے؟‘۔

یاد رہے کہ شام میں جاری جنگ کے باعث ہزاروں خاندانوں نے اپنی جانیں بچانے کے لیے مختلف ممالک کے  مہاجر کیمپس میں پناہ لے رکھی ہے جن کے تحفظ کے لیے مختلف این جی اوز سرگرم ہیں۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2017 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top