site
stats
عالمی خبریں

امریکا کوایسی تکلیف دیں گے جواس نے پہلے کبھی نہیں سہی ہوگی،شمالی کوریا کی دھمکی

جنیوا : شمالی کوریا نے امریکا کودھمکی دیتے ہوئے کہا کہ امریکا کو ایسی تکلیف دیں گے جو اس نے پہلے کبھی نہیں سہی ہوگی۔

اقوام متحدہ میں شمالی کوریا کے سفیر نے اقوام متحدہ کی نئی پابندیوں کے جواب میں اپنے بیان میں کہا کہ پابندیوں کی غیر قانونی قرارداد کو مسترد کرتے ہیں، شمالی کوریا کے آئندہ اقدامات سے امریکا کو اتنی تکلیف پہنچے گی، جو اس نے پہلے کبھی نہیں سہی ہوگی۔

انھوں نے کہا کہ امریکی حکومت یہ خواب دیکھ رہی ہے کہ شمالی کوریا اپنا جوہری پروگرام لپیٹ دے گا، جو آخری مراحل میں داخل ہو چکا ہے۔

یاد رہے کہ شمالی کوریا کے چھٹے جوہری تجربے کے بعد اقوام متحدہ نے متفقہ طور پر شمالی کوریا پر نئی پابندیاں عائد کرنے کی منظوری دی، نئی پابندیوں میں شمالی کوریا کی توانائی اور ٹیکسٹائل انڈسٹری کو نشانہ بنایا گیا ہے۔


مزید پڑھیں : شمالی کوریا کے خلاف اقوام متحدہ کی نئی پابندیاں


نئی پابندیوں کے بعد شمالی کوریا بین الاقوامی منڈی سے اپنی ضرورت کا 30 سے 35 فی صد تیل در آمد نہیں کر سکے گا، اس پابندی سے شمالی کوریا کو سالانہ 80 کروڑ ڈالرز کا نقصان ہوگا۔

خیال رہے کہ شمالی کوریا کی جانب سے تین ستمبر کو جوہری بم کے تجربے کے بعد امریکہ سمیت عالمی برادری سخت تشویش میں مبتلا ہے ، اسی تشویش کے پیش نظر امریکہ نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں شمالی کوریا پر نئی پابندیوں کی تجویز پیش کی تھی۔

امریکہ کی تجویز کردہ قرارداد میں شمالی کوریا کو تیل کی فراہمی مکمل طور پر بند اور ملک کے سربراہ کم جونگ کے تمام اثاثے منجمد کرنے کی بھی تجویز شامل تھی تاہم ان دو تجاویز کو منظور نہیں کیا گیا۔

امریکی وزیر خارجہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے اہم اجلاس میں شمالی کوریا کے اہم اتحادی چین اور روس نے جوہری تجربوں کی مذمت کرتے ہوئے نئی پابندیوں کی حمایت کی تاہم دونوں ملکوں نے شمالی کوریا کے ساتھ تنازع کا سفارتی حل نکالنے پر بھی زور دیا۔


شمالی کوریا کا ہائیڈروجن بم کے کامیاب تجربے کا دعویٰ


واضح رہے کہ گزشتہ روز شمالی کوریا نے ہائیڈروجن بم کا کامیاب تجربہ کیا تھا جس کے بعد شمالی کوریا میں زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے تھے جن کی شدت ریکٹر اسکیل پر 6.3 ریکارڈ کی گئی تھی۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2017 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top