site
stats
خواتین

وہیل چیئر پر بیٹھی دنیا کی پہلی مس ورلڈ

پولینڈ : آپ نے ملکہ حسن کے مقابلے تو بہت دیکھے ہونگے لیکن اب وہ حیسنائیں جو معذور ہیں لیکن بے حدخوبصورت ہیں، پولینڈ میں مقابلہ حسن کا منفرد ہوا، جس میں بیلاروس کی حسینہ نے پہلی مس وہیل چیئرورلڈ کا تاج سر پرسجایا۔

تفصیلات کے مطابق چلنے پھرنے سے معذور مگرحسن کی دولت سے مالامال ہے، پولینڈ میں پہلی بار دنیا بھر کی معذور حسیناؤں کا مقابلہ ہوا، حسینائیں وہیل چیئر پربیٹھنے کے با وجود بھی حسن کے جلوے بکھیرتی رہیں ۔

اس مقابلے میں انیس ممالک کی چوبیس دوشیزاؤں نے مقابلے میں جلوے بکھیرے، مقابلےمیں شامل ہونے والی لڑکیوں نے روایتی ملبوسات سے اپنے ملک کی نمائندگی کی۔

وہیل چیئر پر ریمپ پرآئیں تو دل کھول کر داد پائی۔

پہلی مس وہیل چیئرورلڈ کا تاج بیلاروس کی حسینہ الیگزینڈرا کے سر پر سجا، تاج پہنتے وقت الیگزینڈراکی آنکھوں میں آنسو آگئے۔

مقابلے میں دوسرے نمبر پر جنوبی افریقہ کی حسینہ اور تیسرے نمبر پر میزبان ملک پولینڈ کی حسینہ رہی۔

یہ مقابلہ کرانے کا اصل مقصد یہ تھا کہ معذور انسانوں کی کسی نہ کسی جسمانی معذوری کے باعث ان سے متعلق پائی جانے والی روایتی سوچ کو تبدیل کیا جائے اور یہ کہ ویل چیئر پر بیٹھی لڑکیاں بھی کسی سے کم نہیں۔


مزید پڑھیں :  وہیل چیئر پر بیٹھی ماڈل نے دنیا کو دنگ کردیا


پولینڈ میں اونلی ون فاؤنڈیشن نامی تنظیم نے اس مقابلے کا اہتمام کیا ، اس فاؤنڈیشن کی بنیاد دو معذور خواتین نے رکھی تھی، ماضی میں چار مرتبہ ملکی سطح پر مس وہیل چیئر پولینڈ کے مقابلوں کا اہتمام کیا جا چکا ہے۔ لیکن  مس وہیل چیئر ورلڈ مقابلہ وہ پہلی کاوش تھا،  جب اس مقابلے کا بین الاقوامی سطح پر انعقاد کیا گیا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2017 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top